دیکھیں کیا گزرے ہے قطرے پے گہر ہونے تک! – عرفان صدیقی

Daikhain kia guzray hai qatray pay guhr honay tak! - Irfan Siddiqui

You may also like: