supreme court

لڑکی سے مبینہ زیادتی کرنے والا ملزم بری

سرگودھا کی رہنے والی لڑکی سے مبینہ زیادتی کرنے والا ملزم ندیم مسعود 8 سال بعد بری

اسلام آباد :(دنیااردو) سپریم کورٹ نے ملزم ندیم مسعود کومبینہ زیادتی کیس میں 8 سال بعد بری کر دیا عد الت نے کہا کہ یہ کیس زنا بالرضا کاہے – لڑکی کے خاندان نے 7 ماہ تک کوئی رپورٹ کا اندراج نہیں کرایا، جب لوگوں کو معلوم ہوا تو لڑکی نے زیادتی کا الزام لگا دیا- اس طرح جرم ثابت نہ ہوسکا-
سرگو دھا کی رہنے والی لڑکی سے مبینہ زیادتی کیس کی سماعت چیف جسٹس آصف سعید کھوسہ کی سربراہی میں 2 رکنی بینچ نے کی- متا ثرہ لڑکی نے عدالت کو بتایا کہ ملزم ندیم مسعود میرے ساتھ زیادتی کرتا رہا جس میں حاملہ ہو گئی ، اب میری بیٹی 8 سال کی ہوگئی ہے – لڑکی نے والد نے کہا کہ مجھے انصاف دیا جائے ملزم ندیم مسعود بہت بااثرشخص ہے.چیف جسٹس نے کہا کہ اگر فیصلہ انپی مرضی کاہو تو آج کل وہی انصاف تصور کیاجاتا ہے

اگر نہ ہو تو وہ انصاف نہیں -چیف جسٹس نے کہا کہ خاتون نے زیادتی کا الزام اس وقت لگایا جب لوگوں نے دیکھ لیا- میڈیکل رپورٹ میں بھی زیادتی کا کچھ نہیں لکھا- عدالت نے کہا کہ استغاثہ اپنا مقدمہ ثابت کرنے میں ناکام رہا جس کی وجہ سے عدالت نے ملزم ندیم مسعود کو 8سال بعد بری کردیا